اساتذہ کی معاشرے میں مسلمہ حقیقت و اہمیت کو تسلیم کرنا ہے


یوم تکریم اساتذہ کے موقع پر وائس چانسلر جامعہ پنجاب ڈاکٹر ظفر معین نصر سے مرکزی صدر انجمن طلباء اسلام بردار نعمان الجبار کی قیادت میں وفد کی ملاقات ، جس میں اکرم رضوی ،عامر اسماعیل ، محمد عتیق اسلم رانا سابق ضلعی جنرل سیکرٹری اوکاڑہ اور دیگر ساتھیوں نے پھولوں کا تحفہ پیش کیا اور کہاکہ یہ خاص دن منانے کا مقصد اساتذہ کی معاشرے میں مسلمہ حقیقت و اہمیت کو تسلیم کرنا ہے لیکن بدقسمتی سے ہمارے معاشرے میں صورتحال اس سے بالکل برعکس ہے ادب تو گویا شاید دقیانوسی کے زمانے کی باتیں تھیں احترام غالباً ہماری تربیت میں شامل نہیں اسی لئے طالبعلم کی شکل میں چھپے بھیڑیے اساتذہ سے دست و گریباں ہوتے ہیں انہیں دھکے اور تھپڑ رسید کرتے ہیں اور بعد ازاں اللہ اکبر کی صدائیں بلند کرتے انہیں ٹارچر سیلوں میں منتقل کردیتے ہیں اور تعلیمی اداروں سے باہر حکمران طبقہ کبھی اساتذہ کو تنخواہوں اور کبھی تبادلوں کی صورت میں ذلیل و خوار کرکے ادب بجا لاتا ہے وہ کئی کئی روز سڑکوں اور شاہراہوں پر کسمپرسی کی تصویر بنے رہتے ہیں لیکن یہ عظمت و ہمت کے کوہ گراں نادان سمجھ کر پیغمبری پیشہ ادا کررہے ہیں انکے جذبے کبھی ماند نہ ہوئے وہ مسلسل گوہر تراش رہے ہیں لعل و جواہر اگل رہے ہیں مایوسیوں میں امید کی آخری کرن کا کردار ادا کررہے ہیں تعلیم کے زیور سے آراستہ کر رہے ہیں کہ شاید اس ملت کے نوجوان اپنی کھوئی ہوئی عظمت رفتہ کو بحال کرسکیں جو کبھی انکا مقدر تھی انکی میراث تھی محض ایک دن ایک پھول کا تحفہ دیکر استاد کی عزت کا حق ادا نہیں کیا جاسکتا اور نہ ہی اسوقت تک کامیابی ہمارا مقدر ہوگی جب تک ہم استاد کو عدالت شاہراہ اورسڑک کی بجائے تعلیمی اداروں کی زینت نہ بنا لیں…

5,922 total views, 2 views today

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *